محمد ثالث

خلیفہ
امیرالمومنین
سلطان سلطنت عثمانیہ
خادم الحرمین الشریفین
محمد ثالث
محمد ثالث

خلیفہ
امیرالمومنین
سلطان سلطنت عثمانیہ
خادم الحرمین الشریفین
دور حکومتجنوری 15, 1595 – دسمبر 22, 1603
شریک حیاتyes
سلطان سلطنت عثمانیہ
معلومات شخصیت
پیدائش26 مئی 1566  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
مانیسا  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات22 دسمبر 1603 (37 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
استنبول  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
مدفناستنبول  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام دفن (P119) ویکی ڈیٹا پر
شہریتOttoman flag.svg سلطنت عثمانیہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
مذہباسلام
زوجہخنداں سلطان
عالمہ سلطان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شریک حیات (P26) ویکی ڈیٹا پر
اولاداحمد اول،مصطفی اول  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں اولاد (P40) ویکی ڈیٹا پر
والدمراد سوم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں والد (P22) ویکی ڈیٹا پر
والدہصفیہ سلطان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں والدہ (P25) ویکی ڈیٹا پر
خاندانعثمانی خاندان
دستخط
محمد ثالث
محمد ثالث

محمد ثالث (عثمانی ترکی: محمد ثالث Meḥmed-i sālis, ترکی: III.Mehmed) (پیدائش 26 مئی 1566ء22 دسمبر 1603ء) 1595ء سے اپنی وفات تک سلطنت عثمانیہ کا فرمانروا رہا۔ وہ اپنے والد مراد سوم کی جگہ تخت سلطانی پر بیٹھا۔

سلطنت عثمانیہ میں تخت سنبھالنے کے ساتھ ہی "قتل برادران" کی قبیح رسم کا آغاز سلطان محمد فاتح کے دور میں ہوا اور آہستہ آہستہ یہ رسم زور پکڑتی گئی۔ اس کی بنیادی وجہ نئے سلطان کے لیے بغاوت کے خطرات کو کم کرنا تھا لیکن محمد ثالث کا تخت سنبھالنا برادر کشی کے اس سلسلے میں ایک سیاہ باب کا اضافہ تھا اور 27 بھائیوں کا قتل محمد ثالث کو عثمانی تاریخ میں ناپسندیدہ کرداروں میں شامل کرنے کے لیے کافی تھا۔ اس نے اپنی بیس سے زائد بہنوں کو بھی قتل کیا۔ اس میں حکمرانی کا کوئی گُر نہ تھا اور تمام تر اختیارات اس کی والدہ صفیہ سلطان کے ہاتھ میں تھے۔ اس کے دور کا اہم واقعہ ہنگری میں آسٹریا اور عثمانیوں کے درمیان جنگ تھی جو 1596ء سے 1605ء تک جاری رہی۔ جنگ میں عثمانیوں کی شکست کے باعث سلطان کو افواج کی قیادت خود سنبھالنی پڑی اور وہ سلیمان اول کے بعد میدان جنگ میں اُترنے والا پہلا عثمانی حکمران تھا۔ اس کی افواج نے 1596ء میں اگری فتح کیا اور جنگ کرسزتس میں ہیبسبرگ اور ٹرانسلوانیا کی افواج کو شکست دی۔ اگلے سال معالجین نے سلطان کو کثرت شراب نوشی اور بسیار خوری سے پیدا ہونے والے امراض کے باعث میدان جنگ میں اترنے سے منع کر دیا۔ ان جنگوں میں فتوحات کے باعث محمد ثالث کے دور میں زوال پزیر سلطنت عثمانیہ کو کوئی اور دھچکا نہیں پہنچا۔

محمد ثالث
پیدائش: مئی 26, 1566 وفات: دسمبر 22, 1603[عمر 37]
شاہی القاب
ماقبل 
مراد ثالث
سلطان سلطنت عثمانیہ
جنوری 15, 1595 – دسمبر 22, 1603
مابعد 
احمد اول
مناصب سنت
ماقبل 
مراد ثالث
خلیفہ
جنوری 15, 1595 – دسمبر 22, 1603
مابعد 
احمد اول

سانچہ:عثمانی شجرہ نسب

Other Languages
فارسی: محمد سوم
English: Mehmed III
Afrikaans: Mehmet III
azərbaycanca: III Mehmed
Bân-lâm-gú: Mehmed 3-sè
беларуская: Мехмед III
български: Мехмед III
bosanski: Mehmed III
brezhoneg: Mehmet III
català: Mehmet III
čeština: Mehmed III.
dansk: Mehmet 3.
Deutsch: Mehmed III.
eesti: Mehmet III
Ελληνικά: Μωάμεθ Γ΄
español: Mehmed III
euskara: Mehmed III.a
français: Mehmed III
Gàidhlig: Mehmed III
Հայերեն: Մեհմեդ III
हिन्दी: महमद तृतीय
hrvatski: Mehmed III.
Bahasa Indonesia: Mehmed III
íslenska: Mehmed 3.
italiano: Mehmet III
ქართული: მეჰმედ III
қазақша: III Мехмет
latviešu: Mehmeds III
македонски: Мехмед III
Bahasa Melayu: Mehmed III
Nederlands: Mehmet III
日本語: メフメト3世
norsk: Mehmet III
oʻzbekcha/ўзбекча: Mahmud III
پنجابی: محمد III
polski: Mehmed III
русский: Мехмед III
Scots: Mehmed III
slovenčina: Mehmed III.
slovenščina: Mehmed III.
српски / srpski: Мехмед III
srpskohrvatski / српскохрватски: Mehmed III
suomi: Mehmed III
svenska: Mehmet III
Türkçe: III. Mehmed
українська: Мехмед III
Tiếng Việt: Mehmed III
Zazaki: Mehmed III